اپریل 24, 2024

ورلڈ کپ میں پاک، بھارت کرکٹ جنگ کا دن مقرر

سیاسیات- ورلڈ کپ میں پاک، بھارت کرکٹ جنگ کا دن مقرر ہوگیا جب کہ دونوں روایتی حریفوں کے درمیان ٹاکرا 15 اکتوبر کو احمد آباد میں منعقد ہوگا۔

ون ڈے کرکٹ ورلڈ کپ میں میزبان بھارت نے شیڈول ڈرافٹ تیار کرلیا، میڈیا رپورٹ کے مطابق روایتی حریفوں پاکستان اور بھارت کا ٹاکرا 15 اکتوبر کو احمد آباد کے نئے اسٹیڈیم میں ہوگا، جس میں ایک لاکھ شائقین کے بیٹھنے کی گنجائش ہے، 2019 میں سنسنی خیز فائنل کھیلنے والی انگلینڈاور نیوزی لینڈ کی ٹیمیں بھی 15 اکتوبر کو میدان میں اتریں گی۔

بھارتی کرکٹ بورڈ ورلڈ کپ کا شیڈول ابھی آئی سی سی شیئر کیا ہے، جسے ورلڈ گورننگ باڈی نے شریک ملکوں کو فیڈبیک جاننے کیلیے بھی ارسال کیا ہے، حتمی شیڈول آئندہ ہفتے متوقع ہے، منظرعام پر آنے والے شیڈول میں ابھی تک سیمی فائنلز کے وینیوز کا ذکر نہیں کیا گیا ہے لیکن یہ مقابلے ممکنہ طور پر 15 اور 16 نومبر کو کھیلے جائیں گے، فائنل 19 نومبر کو احمد آباد میں ہی ہوگا۔

کرک انفو کے مطابق بھارتی ٹیم اپنے لیگ میچز ملک کے مختلف 9 وینیوز پر کھیلے گی، پاکستانی ٹیم کو لیگ میچز میں 5 وینیوز پر حریف ٹیموں کا سامنا کرنا ہوگا، پاکستان کو کوالیفائر سے آنے والی 2 ٹیموں کیخلاف 6 اور 12 اکتوبر کو حیدرآباد ، دکن میں کھیلنا ہوگا، جس کے بعد گرین شرٹس 20 اکتوبر کو بنگلور میں آسٹریلیا کے مقابل آئیں گے۔

افغانستان سے ٹاکرا 23 اکتوبر اور جنوبی افریقہ سے 27 اکتوبر کو چنئی میں مقابلہ طے کیا گیا ہے، بنگلہ دیش سے کولکتہ میں 31 اکتوبرکو میدان سجے گا، نیوزی لینڈ سے بنگلور میں میچ دن کی روشنی میں کھیلا جائیگا، انگلینڈ سے معرکہ 12 نومبر کو کولکتہ میں شیڈول کیا گیا ہے، مجوزہ شیڈول میں آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ کا مقابلہ 29 اکتوبر کو دھرم شالہ میں رکھا گیا ہے۔

اس کے علاوہ آسٹریلیا اور انگلینڈ کی ٹیمیں 4 نومبر کو احمد آباد میں صف آرا ہوں گی، نیوزی لینڈ اور جنوبی افریقہ کی ٹیمیں یکم نومبر کو پونے میں آمنے سامنے ہونگی۔

میگاایونٹ کے شیڈول میں اس بار ہونے والی تاخیر غیرمعمولی ہے، ماضی میں منعقدہ دو ایڈیشنز 2015 اور 2019 کے شیڈول میگا ایونٹ سے چار ماہ قبل منظرعام پر آگئے تھے، اس سے قبل بھارتی بورڈ کے سیکریٹری جے شاہ نے 27 مئی کو کہا تھا کہ ورلڈ کپ کا شیڈول ٹیسٹ چیمپئن شپ فائنل کے دوران سامنے آجائے گا لیکن وہ اس میں ہونے والی تاخیر کا کوئی جواز نہیں پیش کرپائے تھے۔

دوسری جانب آئی سی سی بھی شیڈول میں ہونے والی تاخیر پر کوئی تسلی بخش جواب نہیں دے پائی ہے، آئی سی سی کے چیف ایگزیکٹیو آفیسر جیف ایلرڈائس نے گذشتہ دنوں کہا تھا کہ شیڈول کسی بھی وقت سامنے آسکتا ہے لیکن اس کی حتمی تاریخ کا ابھی کچھ کہنا قبل از وقت ہوگا۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

fifteen − five =