جون 23, 2024

عمران خان کیساتھ ہیں، صدر اپنے عہدے کی وجہ سے خاموش ہیں، علوی خاندان

سیاسیات-صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی اور اُن کے صاحبزادے عواب علوی کا کہنا ہے کہ علوی خاندان لاکھوں پاکستانیوں کی طرح عمران خان اور تحریک انصاف کے ساتھ ہے۔

پی ٹی آئی کے رہنما شیر افضل مروت کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا تھا کہ صدر مملکت عارف علوی کو بزدل ، بھگوڑا قرار دیا اور بتایا کہ عواب علوی نے پی ٹی آئی ٹکٹ کے لیے اپلائی کیا جس پر میں نے شدید مخالفت کی تھی۔

اس بیان کے بعد سماجی رابطے کی سائٹ پر ایک طوفان آیا جس پر عواب علوی نے خاموشی توڑتے ہوئے پہلی بار صدر مملکت کی عمران خان کے ساتھ وابستگی پر کھل کر لکھا۔

انہوں نے اپنے بیان میں لکھا کہ ’علوی خاندان پاکستان کے لاکھوں لوگوں کی طرح عمران خان اور پی ٹی آئی کے ساتھ ہے، ڈاکٹر عارف علوی کے فیصلوں کے حوالے سے غلط فہمیوں پر حساسیت کی وجہ سے خاموشی اختیار کی ہوئی ہے، پی ٹی آئی کے بہت سے رہنما اس کی دلیل جانتے اور سمجھتے ہیں‘۔

عواب علوی نے کہا کہ ’بہت جلد عمران خان باہر آجائیں گے تو پھر ڈاکٹر عارف علوی انہیں ساری صورت حال اور اپنے کردار کے حوالے سے آگاہ کریں گے، ڈاکٹر عارف علوی ہمیشہ عمران خان کے شانہ بشانہ کھڑے رہے ہیں اور انہیں سچا مخلص پاکستانی سمجھتے ہوئے یہ مانتے ہیں کہ صدارت عمران خان کی امانت تھی اور ہے‘۔

عواب علوی نے لکھا کہ ’عارف علوی عمران خان کے خلاف کسی بھی غیر آئینی کوشش کو روکنے کے لیے موجود رہے،عارف علوی کو ملک میں انتخابات کو روکنے کے کسی غیر آئینی اقدا م کو روکنے کا کام سونپا گیاتھا، اُن کی عدم موجودگی کی صورت میں پابند نگران صدر آرڈیننس کے بعد آرڈیننس پر دستخط کیا‘۔

اُن کا کہنا تھا کہ ’بے ترتیب آرڈیننس کی بنیاد پر بے قابو طاقت کا امکان زیادہ تباہی مچا سکتا تھا، پی ڈی ایم، ای سی پی اور ان کے ساتھی اپنے پاوٴں میں گولی مارنے پر مجبور ہیں لیکن انتخابات کرانا پڑ رہے ہیں، مخالفین عمران خان کی مقبولیت کو ناکام بنانے کے لیے اپنی گھبراہٹ میں بار بار بے نقاب ہو رہے ہیں، آج صدر مملکت کو شیر افضل مروت کی ویڈیو شیئر کی تو انہوں نے بھاری دل سے جواب دیا‘۔

بیٹے کے مطابق عارف علوی نے جواب دیا کہ ’اللہ مالک ہے، فکر نہ کرو ، اپنے اعمال کی ذمہ داری میں نے خود اٹھانی ہے، عمران خان جب باہر آئیں گے تو میں خو د انہیں جواب دوں گا، ہم صرف یہ چاہتے ہیں کہ پاکستان اس بحران سے نکلے اور انشاء اللہ پاکستان نکلے گا‘۔
عواب علوی نے لکھا کہ ’پی ٹی آئی کے بانی اور رہنماؤں و کارکنان کی گرفتاریوں، جسمانی اذیت اور زیادتی پر پر صدر مملکت کو شدید دھچکا پہنچا ہے، وہ پھر بھی خاموش رہ کر باوقار سربراہ مملکت کے طور پر برتاوٴ کررہے ہیں، ہم سب امید اور دعا کرتے ہیں کہ عمران خان جلد آزاد ہو کر ہمارے درمیان ہوں‘۔

انہوں نے مزید لکھا کہ ’ہم سب امید اور دعا کرتے ہیں کہ عمران خان جلد آزاد ہو کر ہمارے درمیان ہوں‘۔ عواب علوی نے مزید لکھا کہ ’عوام ووٹ ڈالنے کے لیے باہر نکلیں اور 8 فروری کو ہیرا پھیری کرنے والوں کو شکست دیں، صدر عارف علوی نے مسلسل کہا ہے کہ عمران خان سب سے زیادہ ایماندار اور وفادار پاکستانی ہیں‘۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

two × four =