جون 23, 2024

علمائے اہلسنت نے خودکش حملوں سمیت دہشتگردی کی تمام کارروائیاں قطعی حرام قرار دے دیں

سیاسیات-علمائے اہلسنت نے کہا ہے کہ پاکستان میں خودکش حملوں سمیت دہشت گردی کی ساری کارروائیاں قطعی حرام، اسلام دشمنی اور انسانیت دشمنی ہیں۔

کراچی  میں مفتی منیب الرحمان کی زیر صدارت دارالعلوم نعیمیہ میں یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر علمائے اہلسنت کنونشن ہوا جس میں متعدد علما نے شرکت کی۔

کنونشن میں سوئیڈن میں قرآن مجید کی بےحرمتی، سود سے متعلق وفاقی شریعت کورٹ کے فیصلے پر بھی بحث کی گئی۔

علمائے اہلسنت کے اجلاس بعد اعلامیہ جاری کیا گیا جس میں علمائے اہلسنت نے قرار دیا ہے کہ پاکستان میں خودکش حملوں سمیت دہشت گردی کی ساری کارروائیاں قطعی حرام، اسلام دشمنی اور انسانیت دشمنی ہیں۔

اعلامیے میں کہا گيا کہ ہم ملکی سلامتی کیلئے ریاستی اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں۔

مفتی منیب الرحمان نے کہاکہ اسلامی مقدسات کی توہین کے سدِباب کیلئے مسلمان حکمران مؤثر سفارتی اوراقتصادی اقدامات کریں۔

خیال رہے کہ 30 جنوری کو پولیس لائنز مسجد کے پرانے مین ہال میں خودکش دھماکا ہوا تھا جس کے نتیجے میں پولیس افسران و اہلکاروں سمیت 84 افراد شہید ہوئے۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

thirteen − nine =