مئی 18, 2024

زرعی اراضی فوج کو دینے کا اقدام غیر قانونی قرار دینے کا فیصلہ معطل

سیاسیات-ہائی کورٹ نے زرعی اراضی فوج کو دینے کا اقدام غیر قانونی قرار دینے کا فیصلہ معطل کردیا۔

زرعی اراضی  فوج کو دینے سے متعلق سنگل بنچ کے فیصلے کے خلاف پنجاب حکومت کی اپیل پر سماعت ہوئی، جس میں لاہور ہائی کورٹ کے 2 رکنی بینچ نے سنگل بینچ کا فیصلہ معطل کر دیا ۔ واضح رہے کہ سنگل بینچ نے زرعی مقاصد کے لیے زمین فوج کو دینے کا اقدام غیر قانونی قرار دیا تھا ۔

جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ نے پنجاب حکومت کی اپیل پر سماعت کی ، جس میں کہا گیا تھا کہ عدالتی فیصلے میں تضاد ہے ، درخواست گزار متاثرہ فریق نہیں ہے۔ ایگریکلچرل پالیسیوں کو ریگولیٹ کرنا عدالتوں کی ذمے داری نہیں ہے ۔ سنگل بینچ نے فوج کو زمین دینے کے نوٹیفکیشن کو قانون کے برعکس کالعدم قرار دیا ۔

پنجاب حکومت نے اپنی اپیل میں مؤقف اختیار کیا کہ قانون کے مطابق نگراں حکومت سابقہ حکومت کے کسی نامکمل اقدام یا پالیسی کی تکمیل کرسکتی ہے۔ منصوبہ نگراں حکومت نے شروع نہیں کیا، اس سے پہلے منتخب حکومت نے شروع کیا تھا ۔ لاہور ہائی کورٹ سے استدعا ہے کہ زمین فوج کو دینے کے نوٹیفکیشن کو کالعدم قرار دینے کا سنگل بنچ کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

13 − 6 =