مئی 21, 2024

امریکہ حوثی حملوں سے نمٹنے کے لئے پاکستانی تعاون کا خواہشمند

سیاسیات- امریکہ یمن کے حوثیوں کے حملوں سے نمٹنے کیلئے پاکستان سے تعاون کا خواہشمند ہے۔

امریکی محکمہ خارجہ کی اردو ترجمان مارگریٹ میکلاؤڈ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان نیوی انٹرنیشنل کمبائن میری ٹائم فورس موثر رکن ہے، حوثیوں کے حملوں سے خطے کی تجارت متاثر ہو رہی ہے،  پاکستان سے بحیرہ احمر میں کشیدگی پر رابطے میں ہیں۔

امریکی محکمہ خارجہ کی اردو ترجمان مارگریٹ میکلاؤڈ کا کہنا تھا کہ خطے کے دیگر ممالک حوثیوں کیخلاف ٹاسک فورس میں شامل ہوں تو خوش آمدید کہیں گے، امریکہ اور اس کے اتحادیوں کو یمن کی عوام کی مشکلات کا احساس ہے۔

مارگریٹ میکلاؤڈ نے کہا کہ حوثیوں کے خلاف حکمت عملی جارحانہ نہیں ہے،  امریکہ نے حوثیوں کے ٹھکانوں پر حملے کو دفاعی قرار دے دیا ہے، حوثیوں کے حملوں سے پورے خطے کی تجارت متاثر ہو رہی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسرائیل سمیت خطے کے تمام ممالک کو غذائی قلت سے بچانا چاہتے ہیں،  بحری جہازوں کی آمدو رفت کو محفوظ بنانے کیلئے یمنی گروپ کیخلاف آپریشن کر رہے ہیں، خطے کے تمام ممالک بشمول پاکستان کو امریکہ اور برطانیہ کی نئی ٹاسک فورس کے تحت قائم کی جانے والے “خوشحالی محافظ آپریشن کا ساتھ دینا چاہیے۔

مارگریٹ میکلاؤڈ کا کہنا تھا کہ حوثیوں کو ہتھیار اور اسرائیلی جہازوں کی اطلاعات ایران فراہم کر رہا ہے،  ایرانی حکومت کی پالیسیاں عام ایرانی عوام کیلئے مشکلات کا باعث ہیں۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ ایرانی حکومت مشرق وسطی میں اشتعال انگیز اور عدم استحکام کی کاروائیاں بند کرے۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

eleven − three =