مئی 18, 2024

الیکشن اسی وقت ہوگا جب عمران خان نااہل ہوچکے ہوں گے۔ حامد میر

سیاسیات-سینئر صحافی و تجزیہ کار حامد میر نے کہا ہےکہ الیکشن اسی وقت ہوگا جب چیئرمین تحریک انصاف نااہل ہوچکے ہوں گے۔

نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے حامد میر نے کہا کہ عمران خان کے خلاف مقدمات تو بہت سے قائم ہوئے ہیں مگر ٹرائل شروع نہیں ہوا، فوجی عدالتوں میں ابھی تک عمران خان کے خلاف ٹرائل شروع نہ ہونے کی وجہ 9 مئی کے واقعات کی مختلف رخوں کے ساتھ مکمل تحقیقات کرنا ہے تاکہ پکا ہاتھ ڈالا جاسکے۔

انہوں نے کہا کہ کچھ لوگوں کے مطابق گرفتار شدگان نے ایسے ایسے انکشافات کیے ہیں جسے سن کر چودہ طبق روشن ہوجائیں،پانچ چھ لوگوں کی ممکنہ پریس کانفرنس کا سنا جارہا ہے جو وعدہ معاف گواہ بن سکتے ہیں۔

حامد میر کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ (ن) اندر سے ایک ہیں، آئندہ نگران سیٹ اپ میں دونوں کی مشاورت شامل ہوگی، پنجاب اور خیبرپختونخوا کی نگران حکومتیں الیکشن کروانے کے سوا تمام کا م کررہی ہیں، پیپلز پارٹی کے بہت سے رہنماؤں نے پارٹی قیادت سے پنجاب اور خیبرپختونخوا کی نگران حکومتوں پر خدشات کا اظہار کیا ہے، پیپلز پارٹی میں خیال پیدا ہورہا ہے کہ مرکز اور بلوچستان میں نگران حکومتیں بھی الیکشن نہیں کروائیں گی۔

انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی اور (ن) لیگ کو شک ہے کہ آئندہ نگران حکومت تین مہینے نہیں چھ مہینے یا نو مہینے کیلئے آئے گی، یہ چاہتے ہیں نگران حکومت تین مہینے کیلئے آئے اور الیکشن کروا کے چلی جائے، اس شک کی وجہ سے پیپلز پارٹی، (ن) لیگ سے مشاورت کرکے بیانات دے رہی ہے تاکہ کہیں سے یقین دہانی آجائے۔

پروگرا میں گفتگو کرتے ہوئے سابق اسپیشل پراسیکیوٹر نیب عمران شفیق نے کہا کہ عمران خان نے اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کرکے موقع گنوادیا۔

اس موقع پرماہر معیشت خاقان نجیب نے کہا کہ آئی ایم ایف پروگرام کی وجہ سے پاکستان کے ڈیفالٹ ہونے کا خطرہ ختم ہوگیا ہے۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

one × three =