مئی 20, 2024

ارباب اختیار محرم الحرام میں مجالس، محافل اور جلوس ہائے عزا کو آزادی کیساتھ یقینی بنانے کے اقدامات جاری کریں۔ قائد ملت جعفریہ پاکستان کا صدر و وزیراعظم کو خط

سیاسیات- قائد ملت جعفریہ پاکستان علامہ سید ساجد علی نقوی نے کہا ہے کہ ارباب اختیار محرم الحرام میں مجالس، محافل اور جلوس ہائے عزا کے انعقاد کو بلارکاوٹ و آزادی کیساتھ یقینی بنانے کے اقدامات جاری کریں، محرم و صفر المظفر کے ایام کو لوڈشیڈنگ فری ایام بھی قرار دیئے جائیں تاکہ نہ صرف عقیدت مندان شہدائے کربلا کو بھرپور انداز میں خراج عقیدت پیش کرسکیں بلکہ دہشت گردی و تخریب کاری کو ناکام بنانے میں یہ عمل معاون ثابت ہوسکے۔ ان خیالات کا اظہار علامہ سید ساجد علی نقوی نے صدر مملکت عارف علوی اور وزیراعظم میاں محمد شہباز شریف کو الگ الگ خطوط کے ذریعے آمدہ ماہ مقدس محرم الحرام 1445ھ و صفر المظفر کے اہم امور بارے میں متوجہ کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید لکھا کہ پوی دنیا اور عالم اسلام کی طرح پاکستان میں بھی تمام مسلمانوں سمیت دیگر مذاہب کے لوگ امام انسانیت، امام عالی مقام اور ان کے رفقاء کو اپنے اپنے انداز میں گلہائے عقیدت پیش کرتے ہیں ان کی یاد مناتے ہیں اسی سلسلے میں مختلف انداز میں مجالس، محافل، جلوس ہائے عزا کا انعقاد ملک کے طول و عرض میں ہوتا ہے۔

قائد ملت جعفریہ پاکستان نے خط می  مزید متوجہ کرتے ہوئے لکھا کہ مجالس، محافل اور جلوس ہائے عزا کے انعقاد کی بجا آوری کو یقینی بنایا جائے، یکم تا 10 محرم الحرام میں امام عالی مقام، شہدائے کربلا اور فلسفہ کربلا کے حوالے سے (کنونشنل میڈیا) الیکٹرانک میڈیا پر خصوصی پروگرامز، نشریات اور پرنٹ میڈیا پر خصوصی کالمز، مضامین اور خصوصی ضمیمے (اسپیشل ایڈیشنز) کی سابقہ روایات کو برقرار رکھا جائے اور محدودیت سے گریز کیا جائے۔ علامہ ساجد نقوی نے مزید لکھا کہ ان ایام میں بجلی کے ترسیلی نظام کو یقینی و موثر بنایا جائے تاکہ ایک طرف عقیدت مندان شہدائے کربلا کو بھرپور انداز میں جہاں خراج تحسین پیش کرسکیں، وہیں دہشت گردوں اور تخریب کاروں کے مذموم مقاصد کو بھی ناکام بنانے میںیہ عمل معاون ثابت ہوسکے۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

fourteen − 12 =