جولائی 15, 2024

ریاض صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے بارے میں اپنی کسی بھی شرط سے پسپائی اختیار نہیں کرے گا

سیاسیات- ایک سعودی عہدیدار نے کہا یے کہ ریاض صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے بارے میں امریکہ سے اعلان کردہ اپنی کسی بھی شرط سے پسپائی اختیار نہیں کرے گا۔ سعودی عرب کے ایک اہلکار نے اپنا نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر صیہونی چینل کو بتایا کہ تل ابیب حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے پر ریاض کی ترجیح قومی سلامتی ہے۔ انہوں نے عبرانی زبان کے چینل “کان-11” کو بتایا کہ سعودی عرب کے لیے، ان دنوں ترجیح قومی سلامتی ہے۔ اس لیے سلامتی کی ضمانتیں، جدید ہتھیاروں کے سودے اور جوہری پروگرام جیسے مطالبات پیش کئے گئے ہیں۔ ایک امریکی اہلکار نے 10 جون کو “اسرائیل ہیوم” اخبار کو بتایا کہ سعودی عرب کی حکومت نے امریکی حکام کے ساتھ مذاکرات میں صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے لیے چار پیشگی شرائط تجویز کی ہیں۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

4 × four =