جون 2, 2024

جنوبی افریقہ نے عالمی عدالت میں غلط دعوے کیے: اسرائیل کا الزام

سیاسیات- اسرائیل نے جنوبی افریقہ پرعالمی عدالت انصاف میں غلط دعوے کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق عالمی عدالت انصاف نے غزہ کے معاملے پر جنوبی افریقہ کی درخواست پر سماعت کے دوران اسرائیل نے الزام عائد کیا کہ جنوبی افریقہ حقائق کو مسخ کرنے کی کوشش کررہا ہے تاکہ وہ جنوبی غزہ اور رفح میں اسرائیل کی فوجی مہم کو روک سکے۔

عالمی عدالت انصاف میں جنوبی افریقہ کی درخواست پر دو روزہ سماعت ہوئی جس میں جنوبی افریقہ کے وکلا نے عدالت میں کہا کہ اسرائیل فلسطینیوں کو صفحہ ہستی سے مٹانے کا ارادہ رکھتا ہے۔

جمعہ کو روز ہونے والی سماعت میں اسرائیل کے وکلا نے اپنے دلائل پیش کیے جس میں اسرائیل نے جنوبی افریقہ کے عالمی عدالت میں انصاف میں اپنائے گئے مؤقف کو مسترد کردیا اور الزام عائد کیا کہ جنوبی افریقہ نے غزہ اور فلسطینیوں کے حوالے سے غلط دعوے کیے۔

رپورٹس کے مطابق عالمی عدالت انصاف میں جنوبی افریقہ نے ایک نئی درخواست بھی دائر کی ہے جس میں کہا گیا ہےکہ اسرائیل پریہ زور دیا جائے کہ وہ غزہ میں امدادی ورکروں، صحافیوں اور تفتیش کاروں کو آزادانہ رسائی دے۔

جنوبی افریقہ کے وکلا کا کہنا تھا کہ رفح میں آپریشن اسرائیل کا غزہ اور فلسطینیوں کی تباہی کے لیے آخری قدم ہے، یہ رفح ہی تھا جو جنوبی افریقہ کو عدالت تک لے آیا لیکن بطور قوم فلسطینیوں کو قتل عام سے مکمل نسلی اور گروہی تحفظ کی ضرورت ہے جس کا حکم عدالت جاری کرسکتی ہے۔

Facebook
Twitter
Telegram
WhatsApp
Email

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

1 × 4 =